بھارت میں منکی پاکس سے پہلی ہلاکت سامنے آگئی

کیرالہ(قدرت روزنامہ)بھارت میں منکی پاکس وباء سے پہلی ہلاکت سامنے آگئی . بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق ریاست کیرالہ کے وزیر صحت وینا جارج نے تصدیق کی ہے کہ کیرالہ کا ایک 22 سالہ نوجوان کا منکی پاکس کا ٹیسٹ مثبت آیا تھا جس کے بعد وہ ہلاک ہوگیا ہے .

22 سالہ نوجوان کو مقامی اسپتال میں علامات ظاہر ہونے پر دو روز قبل داخل کیا گیا تھا اور اگلے ہی روز منکی پاکس ٹیسٹ بھی مثبت آگیا تھا .
ریاستی حکومت نے کہا کہ ٹیسٹ کے نتائج سے منکی پاکس وائرس کی موجودگی کی تصدیق ہوئی ہے، نوجوان میں بظاہرمنکی پاکس کی کوئی علامت نہیں تھی . کیرالہ کے اس نوجوان کو دماغ میں سوزش اور تھکاوٹ کی علامات کے ساتھ اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا .
رپورٹ کے مطابق وزیر صحت نے کہا کہ موت کی اعلی سطحی تحقیقات کی جائے گی کیونکہ منکی پاکس سے اموات کی شرح بہت کم ہے، ریاستی محکمہ صحت نے اس کے نمونے کیرالہ میں نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف وائرولوجی کو بھیجے ہیں . میڈیا رپورٹ کے مطابق مذکورہ نوجوان متحدہ عرب امارات کے علاقے راس الخیمہ میں ملازمت کرتا تھااور 22جولائی کو کیرالہ کے کوزی کوڈ ہوائی اڈے پر پہنچاتھا .
بھارت میں اب تک منکی پاکس کے 4 تصدیق شدہ کیسز ہیں جن میں سے تین کیرالہ میں ہیں، جس مریض کا پہلا کیس رپورٹ ہوا تھا اسے ہفتے کے روز اسپتال سے ڈسچارج کر دیا گیاہے . یاد رہے کہ عالمی ادارہ صحت نے منکی پاکس کو دنیا میں تیزی سے پھیلنے والی وبا قرار دیتے ہوئے خبردار کیا تھا کہ وائرس کے پھیلاؤ کی روک تھام کے لیے ضروری اقدامات کیے جائیں .
واضح رہے کہ منکی پاکس کا پہلا کیس برطانیہ میں رواں برس مئی میں سامنے آیا اور اب تک وہاں 4 ہزار سے زائد مریضوں میں وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے، جب کہ گزشتہ ماہ یورپ میں منکی پاکس وباء سے پہلی ہلاکت بھی سامنے آئی تھی .

. .
Ad
متعلقہ خبریں