پی پی میں شمولیت، بی اے پی کا ارکان صوبائی اسمبلی کو شوکاز نوٹس جاری کرنے کا فیصلہ

کوئٹہ (قدرت روزنامہ)بلوچستان عوامی پارٹی کے ایم پی ایز کا پیپلز پارٹی میں شمولیت کا معاملہ،بی اے پی نے ارکان صوبائی اسمبلی کو شوکاز نوٹس جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے . پیپلز پارٹی میں شمولیت پر ایم پی ایز سے جواب طلب کیا جائے گا .

ایم پی ایز نے جواب جمع نہ کرایا تو الیکشن کمیشن سے رجوع کیا جائے گا . پاکستان پیپلز پارٹی میں شامل ایم پی ایز کی رکنیت ختم کرنے پر بھی مشاورت کی جائے گی .
جبکہ پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ بلوچستان اور پاکستان پیپلزپارٹی کا ایک تاریخی رشتہ ہے،پاکستان پیپلزپارٹی نے ہمیشہ بلوچستان کے حقوق کے لئے حقیقی جدوجہد کی ہے ،بلوچستان کی سیاست میں پاکستان پیپلزپارٹی ایک مضبوط ترین فریق ہے پاکستان پیپلزپارٹی بلوچستان کے عام آدمی کے حقوق کے لئے اپنی جدوجہد پر کبھی سمجھوتہ نہیں کرے گی .
یہ بات انہوں نے بلوچستان کے سیاسی رہنما ئوں سے ملا قات کے دوران گفتگو کر تے ہوئے کہی . اس موقع پر سابق وفاقی وزیر سردار فتح محمد حسنی، سابق صوبائی وزراء نوابزادہ گزین مری اور طاہر محمود ،وزیراعلی بلوچستان کے کوآرڈینیٹر نوابزادہ جمال رئیسانی، میر فرید رئیسانی، میر عبداللہ راہیجا اور میر اللہ بخش رند نے پیپلزپارٹی میں شمولیت اختیار کر نے کا اعلان کر دیا .
پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے صدر آصف علی زرداری نے پاکستان پیپلزپارٹی میں شامل ہونے والے بلوچستان کے سیاسی رہنماؤں کو مبارک باد پیش کی . پاکستان پیپلزپارٹی میں بلوچستان کے اہم سیاسی رہنماؤں کی شمولیت کے موقع پر حاجی علی مدد جتک، حاجی ملک گورگیج، نور احمد بنگلزئی، میر عبید گورگیج، محمد عیسی فتح، لالہ بخش، محی الدین، محمد رضا، ظہور بلیدی، روؤف، اقبال، لیاقت علی ودیگر بھی موجودتھے .

. .

متعلقہ خبریں