نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جسینڈا آرڈرن کا مستعفی ہونے کا اعلان

نیوزی لینڈ (قدرت روزنامہ) نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جسینڈا آرڈرن نے مستعفی ہونے کا اعلان کر دیا . انہوں نے پارٹی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میں نے بطور وزیراعظم اپنے فرائض بہترین طور پر ادا کرنے کی کوشش کی .

اب وہ وقت آ گیا ہے کہ میں وزیراعظم کا منصب چھوڑ دوں . وزیراعظم جسینڈا آرڈرن 7 فروری تک اپنے فرائض سرانجام دیں گی .
جسینڈا آرڈرن نے کہا کہ آئندہ الیکشن لڑنے کا کوئی ارادہ نہیں . انہوں نے کہا وزیراعظم کا عہدہ سنبھالنا ایک بڑی ذمہ داری تھی لیکن اب وہ سمجھتی ہیں کہ ان میں وہ انرجی باقی نہیں رہی کہ وزیراعظم کے منصب کے ساتھ انصاف کر سکیں . میں ایک انسان ہوں، سیاستدان بھی انسان ہوتے ہیں . جب تک ہم کچھ کر سکتے ہیں تو ہم اپنا سب کچھ دیتے ہیں .
ایک ایسا وقت آتا ہے جب آپ کو ان سب سے الگ ہونا پڑتا ہے ، میرے لیے یہ ایک بہترین وقت ہے .
جسینڈا آرڈرن نے کہا کہ موسم گرما کے وقفے کے دوران اس بات پر غور کیا کہ آیا ان کے پاس وزیراعظم کا منصب جاری رکھنے کی توانائی موجود ہے لیکن اب وہ اس نتیجے پر پہنچی ہیں کہ ایسا نہیں ہے . جسینڈا آرڈرن نے 2017 میں 37 سال کی عمر میں منصب سنبھالا تھا اور دنیا کی کم عمر وزیراعظم ہونے کا اعزاز حاصل کیا . نیوز لینڈ میں انتخابات رواں سالک اکتوبر میں ہوں گے .
جسینڈا آرڈرن نے پارٹی کے سالانہ اجلاس کے دوران آئندہ ماہ وزارت عظمیٰ کے منصب سے مستعفی ہونے کا اعلان کر دیا ہے . جسینڈا آرڈرن اگلے ماہ 7 فروری کو نیوزی لینڈ کی وزارت عظمیٰ اور لیبر پارٹی کی رہنما کے عہدے سے سبکدوش ہو جائیں گی . جسینڈا آرڈرن نے کورونا وبا سمیت کرائسٹ چرچ میں دو مساجد پر دہشتگرددانہ حملے سمیت دیگر بڑے چییلنجز کے دوران نیوزی لینڈ کی قیادت کی .

. .

متعلقہ خبریں