پاکستان خطے میں امن کا خواہاں ہے علاقائی سطح پر تجارت بڑھانے کی ضرورت ہے،بلاول بھٹو

تاشقند(قدرت روزنامہ) وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ دنیا کو موسمیاتی تبدیلیوں کے اثرات کا سامنا ہے،اب اٹھائے جانے والے اقدامات ہمارا مستقبل طے کریں گے،ہمیں خطے کی بہتری کیلئے مل کر کام کرنے کی ضرورت ہے . تفصیلات کے مطابق بلاول بھٹو زرداری نے اقتصادی تعاون تنظیم کی وزرائے خارجہ کونسل کے 26 واں اجلاس سے خطاب میں کہا کہ پاکستان خطے میں امن کا خواہاں ہے، جبکہ خطے میں علاقائی سطح پر تجارت بڑھانے کی ضرورت ہے .


2022 میں پاکستان کو تاریخ کے سب سے بدترین سیلاب کا سامنا کرنا پڑا،پاکستان میں سیلاب کے باعث بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی . حالیہ سیلاب سے پاکستان میں تین کروڑ لوگ متاثر ہوئے،سیلاب متاثرین کیلئے امداد دینے پر مختلف ممالک کا شکریہ ادار کرتےہیں .
دنیا کو معاشی،موسمیاتی تبدیلیوں اور اسلامو فوبیا جیسے مسائل کا سامنا ہے،حال میں اٹھائے گئے اقدامات ہمارے مستقبل کو طے کریں گے .

وفاقی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ مسائل کے حل کیلئے تمام ممالک کے ساتھ مل کر کام کرنے پر یقین رکھتے ہیں،ایسا میکنزم بنانا ہو گا جو موسمیاتی تبدیلی کی تباہی سے نمٹنے کیلئے مدد گار ثابت ہو . پاکستان خطے میں امن کا خواہاں ہے، جبکہ خطے میں علاقائی سطح پر تجارت بڑھانے کی ضرورت ہے . یاد رہے کہ اس سے پہلے وزیر خارجہ بلاول بھٹو نے وزیراعظم بننے کا اشارہ دیا .
وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے امریکی اخبار کو انٹرویو میں کہا کہ اگر پیپلز پارٹی الیکشن جیتی تو بطور وزیراعظم مخلوط حکومت بنانے کی کوشش کروں گا . دہشت گردی سے نمٹنے کا واحد راستہ جمہوریت ہے ہم وزیر اعظم شہباز شریف سے صدر بائیڈن کے مزید روابط کی توقع رکھتے ہیں . بلاول بھٹو زر داری نے کہا کہ افغانستان ایک حقیقت ہے،ہمیں عبوری افغان حکومت سے پہلے سے زیادہ روابط بڑھانے کی ضرورت ہے،دہشتگرد گروپوں سے متعلق پاکستان اور امریکا کے مفادات یکساں ہیں . انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کے چیلنج پر فوجی اور سیاسی قیادت واضح موقف رکھتی ہے، افسوس کہ عمران خان کی حکومت ایک کالعدم تنظیم کی طرف نرم گوشہ رکھتی تھی،عمران خان نے ان کے ساتھ مذاکرات کیے،ہم نہیں کریں گے .

. .

متعلقہ خبریں