شدید تنقید کے باوجود اسٹیٹ بینک کی خود مختاری کا بل منظور

اسلام آباد (قدرت روزنامہ) شدید تنقید کے باوجود اسٹیٹ بینک کی خود مختاری کا بل منظور . اسٹیٹ بینک سے لیے جانے والے حکومتی قرضوں پر مکمل پابندی عائد، وفاقی کابینہ نے ترمیمی بل 2021ء کے ترمیم شدہ مسودے کو منظور کر لیا .

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن کی جانب سے شدید تنقید کے باوجود وفاقی کابینہ نے اسٹیٹ بینک آف پاکستان ترمیمی بل منظور کر لیا ہے .
میڈیا رپورٹ کے مطابق اسٹیٹ بینک ترمیمی بل 2021ء کے ترمیم شدہ مسودے میں اسٹیٹ بینک کو خودمختاری دینے کے ساتھ ساتھ بینک سے لیے جانے والے حکومتی قرضوں پر بھی مکمل پابندی عائد کردی گئی ہے . بتایا گیا ہے کہ اسٹیٹ بینک ترمیمی بل کی منظوری کے بعد وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری نے پپشرفت کی تصدیق کی ہے .

بتایا گیا ہے کہ قانون پر اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے شدید تنقید کے باوجود اسے قانونی شکل دے دی گئی ہے .

رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ کابینہ کی جانب سے منظور کردہ بل کے مسودے کے تحت اسٹیٹ بینک آف پاکستان کا بنیادی مقصد ہے مقامی سطح پر قیمتوں میں استحکام اور معاون اقتصادی پالیسیوں کا قیام عمل میں لانا ہے . دوسری جانب مسلم لیگ ق نے پارٹی مشاورت کے بعد فنانس بل کو ووٹ دینے کا فیصلہ کر لیا ہے . مسلم لیگ ق کے سینئیر رہنما کا کہنا ہے کہ بل کی کسی شق پر اعتراض ہوا تو اپنی تجاویز دیں گے .
علاوہ ازیں اپوزیشن نے بھی منی بجٹ کے معاملے پر خوب احتجاج کا فیصلہ کر رکھا ہے یہی وجہ ہے کہ اپوزیشن اراکین کو منی بجٹ پیش کیے جانے کے موقع پر حاضری کو یقینی بنانے کی ہدایت کی گئی ہے . یاد رہے کہ گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا . وفاقی کابینہ کے اجلاس کی اندرونی کہانی بھی سامنے آ گئی ہے جس کے مطابق کابینہ اجلاس میں منی بجٹ کے معاملے پر لاعلم ہونے پر اتحادی جماعتوں کے وزرا نے اعتراض اُٹھا دیا .
سینئیر صحافی نعیم اشرف بٹ نے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ اتحادی جماعتوں کے وزرا نے منی بجٹ پر اعتراض کرتے ہوئے کہا کہ پہلے ہمیں بتائیں تو سہی کہ بل میں ہے کیا پھر دیکھیں گے . اتحادی وزیر کا کہنا تھا کہ ہر مرتبہ سرکولیشن سمری کے ذریعے منظوری لے لی جاتی ہے جو درست نہیں ہے . حکومتی اتحادی جماعت ایم کیو ایم کے وزیر نے کہا کہ آپ ہمیں دکھائیں گے تو پھر ہی ہم آپ کو اپنی ان پُٹ دیں گے . اتحادی جماعتوں کے وزرا کے اعتراض پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ بالکل ہم آپ کو بریف کرنے کے لیے علیحدہ سیشن رکھتے ہیں . تاہم مسلم لیگ ق نے منی بجٹ کی حمایت کرنے کا اعلان کر دیا ہے .

. .
Ad
متعلقہ خبریں