پنجاب میں ضمنی انتخابات، فواد چوہدری کا ن لیگ اور پیپلز پارٹی کے اتحاد پر دلچسپ تبصرہ

لاہور (قدرت روزنامہ) پنجاب کے ضمنی انتخابات، پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے حکمت عملی تیار کر لی، پیپلز پارٹی پنجاب کے 20 صوبائی حلقوں میں ضمنی انتخابات کیلئے مسلم لیگ ن کی حمایت کرے گی، پیپلز پارٹی کے امیدوار کاغذاتِ نامزدگی واپس لے لیں گے . اسی پر سابق وفاقی وزیر اور پی ٹی آئی رہنما نے دلچسپ تبصرہ کیا ہے .

انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب میں ن لیگ اور پیپلز پارٹی اتحاد نے پی ٹی آئی کے لوٹوں کو الیکشن لڑانے کیلئے اتحاد کیا ہے، ضرورت یہ ہے کہ نئے اتحاد کو مشترکہ انتخابی نشان لوٹا دیا جائے تا کہ عوام کو واضع ہو کہ وہ کن امیدواروں کو ووٹ دے رہے ہیں .

. قبل ازیں پیپلز پارٹی کے صوبائی وزیر سید حسن مرتضی کی صوبائی وزرا عطا اللہ تارڑ اور ملک احمد خان کے ہمراہ پریس کانفرنس کی .

حسن مرتضی نے کہا کہ پنجاب کی 20 نشستوں پر ضمنی انتخابات میں پیپلز پارٹی نے مسلم لیگ ن کی حمایت کا اعلان کر دیا ہے، مستقبل میں پیپلز پارٹی اور ن لیگ انتخابی میدان میں سیاسی حریف ہی رہیں گی، مگر اس وقت ملکی ضرورت کے مطابق پیپلز پارٹی ن لیگ کے امیدواروں کی حمایت کرے گی .

حسن مرتضی نے کہاکہ تحریک انصاف کے لئے یہ الیکشن کافی مشکل ہوگا،کیونکہ عمران نیازی کی آن گرائونڈپوزیشن کوئی اچھی نہیں ہے،کل کاغذات نامزدگی واپس لینے کا آخری دن ہے،جہاں جہاں پیپلز پارٹی کے امیدواروں نے کاغذات جمع کروائے ہیں واپس لیں گے،وفاق اور پنجاب کے اندر ہماری مشترکہ حکومت ہے . پنجاب کے صوبائی وزرا کی وزارتوں کا اعلان بجٹ پاس ہوتے ہی کر دیا جائیگا .
سینئر صوبائی وزیر حسن مرتضی نے کہا کہ ہم نے آئندہ الیکشن آمنے سامنے لڑنے ہیں،اس وقت ضرورت ہے کہ مل کر الیکشن لڑا جائے،اقتدار چھوڑ کر لوگ ہمارے ساتھ آئے تھے کیونکہ وہ عمران خان کا بوجھ اٹھا کر عوام میں نہیں جانا چاہتے تھے . جبکہ مسلم لیگ (ن) کے صوبائی وزیر عطا تارڑ نے کہا کہ آصف زرداری نے پنجاب کے ضمنی الیکشن میں سپورٹ کا اعلان کیا ہے جس پر انکے مشکور ہیں،عمران خان کو گھر بھیجنے میں آصف زرداری اور بلاول بھٹو کا کردار نہ ہوتا تو یہ سب ممکن نہ ہوتا .

. .
Ad
متعلقہ خبریں