بلوچستان کے مختلف علاقوں میں زلزلے کے جھٹکے، لوگوں گھروں سے باہر نکل آئے

کوئٹہ (قدرت روزنامہ) بلوچستان کے مختلف علاقوں میں دوبارہ زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں، زلزلے کی گہرائی کم ہونےسے شدت زیادہ محسوس کی گئی، تاہم کسی قسم کے نقصان کی اطلاع نہیں ہے . میڈیا رپورٹس کے مطابق بلوچستان کے مختلف علاقوں میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں .

چمن، گلستان، قلعہ عبداللہ، توبہ اچکزئی اور پاک افغان سرحدی علاقوں میں بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے .
زلزلے کے باعث لوگ کلمہ طیبہ کا ورد کرتے ہوئے اپنے گھروں، دکانوں سے باہرنکل آئے . لیویز کنٹرول کا کہنا ہے کہ زلزلے میں کسی قسم کے جانی یا مالی نقصانات کی اطلاع نہیں ملی، قلعہ عبداللہ اور توبہ اچکزئی میں ہائی الرٹ جاری کر دیا گیا ہے . زلزلہ پیماء مرکز کے مطابق ریکٹر اسکیل پر زلزلے کی شدت4.1 ریکارڈ کی گئی، زیرزمین زلزلے گہرائی 11 کلو میٹر اور زلزلے کا مرکز چمن سے 11 کلو میٹر جنوب مشرق میں تھا .
یاد رہے زلزلے ایسی قدرتی آفت ہیں، جس سے دنیا بھر میں لاکھوں افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں . زلزلوں سے متعلق ماہرین کا کہنا ہے کہ زمین کی تہہ تین بڑی پلیٹوں سے بنی ہے . پہلی تہہ کا نام یوریشین، دوسری بھارتی اور تیسری اریبین ہے . زیر زمین حرارت جمع ہوتی ہے تو یہ پلیٹس سرکتی ہیں . زمین ہلتی ہے اور یہی کیفیت زلزلہ کہلاتی ہے . زلزلے کی لہریں دائرے کی شکل میں چاروں جانب یلغار کرتی ہیں .

. .
Ad
متعلقہ خبریں