ڈی جی ہیلتھ سروسزکو عمران خان کیخلاف نازیبا الفاظ استعمال کرنا مہنگا پڑ گیا

پشاور(قدرت روزنامہ) عمران کیخلاف واٹس ایپ گروپ میں نازیبا الفاظ پرڈی جی ہیلتھ سروسز کے پی عہدے سے فارغ . خیبرپختونخوا حکومت نے سابق وزیر اعظم عمران خان کے خلاف واٹس ایپ گروپ میں نازیبا الفاظ استعمال کرنے پر ڈائریکٹر جنرل (ڈی جی) پروونشل ہیلتھ سروسز اکیڈمی ڈاکٹر صاحب گُل کو عہدے سے ہٹا دیا .

تفصیلات کے مطابق اعلامیے کے مطابق ڈاکٹرصاحب گل نے عمران خان کے خلاف واٹس ایپ گروپ میں نازیبا الفاظ استعمال کیےتھے .
اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ڈاکٹر صاحب گل 19اگست 2022کوڈی جی پروونشل ہیلتھ سروسزاکیڈمی تعینات تھے، انہوں نے سابق وزیر اعظم عمران خان اور ان کے خاندان سے متعلق توہین آمیزمیسج بھیجے اور ‘منیجمنٹ کیڈرایسوسی ایشن‘ کے نام والےگروپ میں میسج کرکے عمران خان کومذہبی وابستگی پربدنام کیا .
اعلامیے کے مطابق ڈاکٹرصاحب گل نے اسٹیبلشمنٹ ڈپارٹمنٹ کی ہدایات کے باوجود گورنمنٹ سرونٹس کنڈکٹ رولز 25، 28 اور34اے کی خلاف ورزی کی .

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ گریڈ 20 کے ڈاکٹر صاحب گُل کو ڈائریکٹوریٹ آف جنرل ہیلتھ سروسزرپورٹ کرنےکی ہدایت کی گئی ہے اور پرنسپل پوسٹ گریجویٹ پیرامیڈیکل انسٹیٹیوٹ پشاور ڈاکٹر سعید گُل کو ڈی جی ہیلتھ کی اضافی ذمہ داری تفویض کردی گئی ہے . دوسری جانب نجی ٹی وی سے گفتگو میں ڈی جی پروونشل ہیلتھ سروسز اکیڈمی ڈاکٹر صاحب گل کا کہنا تھاکہ سابق وزیراعظم عمران خان کےخلاف کوئی بھی پیغام یا میسج نہیں کیا، محکمے نے زیادتی کی ہے، اس سے متعلق کچھ علم نہیں .

. .
Ad
متعلقہ خبریں