خیبرپختونخوا میں بلدیاتی انتخابات ،اسد قیصر نے غلطیوں کا اعتراف کرتے ہوئے منتخب نمائندوں کو اہم ہدایات جاری کردیں

صوابی (قدرت روزنامہ) سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا میں 19دسمبر کو ہونے والے بلدیاتی انتخابات کے پہلے مرحلے میں ہم سے جو کو تاہی ہوئی اس کا ہمیں اندازہ ہو چکا ،آئندہ ہر ویلج کونسل میں ترقیاتی کاموں کا جال بچھانے کے لئے مقامی محلے کے لوگوں کے ساتھ مشورہ کیا جائیگا اور آئندہ کے لئے سپیکر ہاﺅس سے کوئی بھی براہ راست کام کی منظوری نہیں دی جائے گی ، موجود حکومت نے بلدیاتی انتخابات کروا پر نچھلی سطح تک اختیارات کی منتقلی کا اپنا وعدہ پورا کر دیا،بلدیاتی نمائندے شہری علاقوں کی طرح دیہاتی علاقوں میں بھی صفائی کیلئے حکمت عملی بنائیں .

مرغز صوابی میں عوامی اجتماع کے شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے اسد قیصر نے کہاکہ حالیہ بلدیاتی انتخابات میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے امیدواروں کو کامیابی سے ہمکنار کر کے پارٹی کو ایک عزت دی ، اس الیکشن میں ہم سے جو کو تاہیاں ہوئی ہیں ،اس کا اندازہ ہمیں ہوا ہے، اب ہماری کوشش ہو گی کہ ایک ایسی پالیسی بنائی جائے جس کے تحت ہر ویلج کونسل میں محلے کے لوگوں کے مشاورت سے تر قیاتی منصوبوں کو عملی جامہ پہنایا جا سکے،بلدیاتی الیکشن کے لئے ہم نے حتی الوسع کوشش کی ،اگر کچھ کمی بیشی ہوئی ہے تو یہ ہماری نا سمجھی یا تجربہ نہ ہونے کی وجہ سے ہوئی ہے .

 انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کو مزید فعال بنانے کے لئے ہر ویلج کونسل کی سطح پر تنظیمیں بنائی جائیں گی، اسی طرح ہر محلے میں تر قیاتی کاموں کو عملی جامہ پہنانے کے لئے ہر خاندان سے ایک ایک نمائندہ شامل کر کے تمام خاندانوں کے مشاورت سے پایہ تکمیل کو پہنچایا جائیگا اور جتنے بھی ضروریات ہو وہ ویلج کونسل کے علاوہ دستیاب وسائل کے مطابق حل کئے جائیں گے ،بلدیاتی الیکشن سے ہم نے کافی کچھ سیکھا ،میرے حوالے سے یہ پرو پگینڈہ ہو رہا تھا کہ وہ اپنے ضلع میں گھوم پھر رہے ہیں، یہ تو ہمارا اپنا علاقہ ہے .

انہوں نے کہا کہ ضلع صوابی میں صفائی کی حالت بہتر بنانے اور خوبصورتی کے لئے ایک جامع پلان تر تیب دیا جائیگا ،ہر وی سی کی سطح پر پلے گراﺅنڈ کے قیام کے لئے پچیس کروڑ روپے اور گھر گھر گیس پہنچانے کے علاوہ روڈز کی تعمیر کے لئے اڑھائی ارب روپے مختص کر دیئے گئے ہیں ، غازی بروتھا ڈیم کی تعمیر کے لئے دریائے سندھ کے پانی کا رخ موڑنے سے پانی کا جو مسئلہ پیدا ہوا ، اس کے حل کے لئے عملی اقدامات کئے جا چکے ہیں اور بہت جلد گلہ کے مقام پر دریائے سندھ کا پانی بحال ہو جائیگا لیکن اس کے بر عکس ستر سالوں سے حکمرانی کرنے والوں نے عوام کے لئے کچھ بھی نہیں کیا . اسد قیصر نے کہا کہ افغانستان کے لئے ایک خصوصی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے وہاں امن آنے سے پاکستان سمیت پورے خطے میں امن آئیگا .  

. .
Ad
متعلقہ خبریں