سعودی عرب، 2 سال کے دوران خام تیل کی یومیہ پیداوار میں ریکارڈ اضافہ

سعودی عرب (قدرت روزنامہ)سعودی عرب میں دو سال کے دوران خام تیل کی یومیہ پیداوار میں ریکارڈ اضافہ کیا گیا ہے . سعودی عرب نے رواں برس مارچ کے مہینے سے یومیہ 7.235 ملین بیرل خام تیل برآمد کرنا شروع کیا ہوا ہے

جو دو برس کے دوران روزانہ کی بنیاد پر برآمد کیا جانے والا سب سے زیادہ خام تیل برآمد کرنے کا ایک ریکارڈ ہے .

یہ بات مشترکا ڈیٹا انیشیئیٹو (جودی) نے اپنے حالیہ جائزے میں بتائی ہے . جودی کے مطابق رواں برس اپریل کے دوران سعودی عرب کی خام تیل کی برآمدات میں اضافہ ہوا ہے .

سعودی عرب کی، جو پوری دنیا میں سب سے زیادہ خام تیل برآمد کرنے والا ملک ہے، اپریل میں خام تیل کی پیداوار بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہے . سعودی عرب نے اپریل میں 10.441 ملین بیرل خام تیل روزانہ کی بنیاد پر نکالا جبکہ مارچ میں روزانہ 10.300 ملین بیرل خام تیل نکالا جا رہا تھا .

سعودی وزیر توانائی شہزادہ عبد العزیز بن سلمان نے گزشتہ ماہ کہا تھا کہ سعودی عرب روزانہ کی بنیاد پر خام تیل کی پیداواری صلاحیت میں اضافہ کرنے جا رہا ہے . یومیہ ایک ملین بیرل سے زیادہ پیداواری صلاحیت بڑھائی جائے گی . 2026ء کے اواخر یا 2027ء کے آغاز تک روزانہ کی بنیاد پر 13 ملین بیرل سے زیادہ خام تیل نکالا جانے لگے گا .

واضح رہے کہ اوپیک پلس معاہدے میں شامل سعودی عرب اور دیگر ممالک نے یوکرین پر حملے کے تناظر میں لگائی جانے والی مغربی پابندیوں کے نتیجے میں روسی خام تیل کی فروخت پر اثرات کے باعث اپنی تیل کی پیداوار میں اضافے پر اتفاق کیا تھا .

رواں برس اپریل میں بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے بھی سعودی عرب کی 2021ء میں 3.2فیصد کی شرح سے بڑھنے والی اقتصادی ترقی کو 2022ء میں خام تیل کی بلند پیداوار اور قیمتوں کے سبب 7.6 کی شرح تک بڑھا دیا تھا .

. .
Ad
متعلقہ خبریں