کورونا کی وبا 2024 تک دنیا کا پیچھا نہیں چھوڑے گی، فائزر کا خدشہ

اسلام آباد (قدرت روزنامہ)کورونا ویکسین بنانے والی کمپنی فائزر نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ یہ وبا 2024 تک دنیا کا پیچھا نہیں چھوڑے گی . فائزر کمپنی کے چیف سائنٹیفک آفیسر مائیکل ڈولسٹن نے ادارے کے سرمایہ کاروں کو دی گئی بریفنگ میں کہا کہ آئندہ 2 برسوں تک دنیا کے مختلف خطوں میں کورونا وبا کی لہریں اٹھتی رہیں گی، تاہم ویکسی نیشن اور حفاظتی اقدامات کی وجہ سے اس وبا کا پھیلاؤ محدود حد تک ہوگا .

2024 تک یہ سلسلہ جاری رہے گا . کورونا پر قابو پانے کے حوالے سے مائیکل ڈولسٹن کا کہنا تھا کہ اس وبا پر کب قابو پایا جاسکے گا اس کا انحصار وائرس کے ارتقا پر ہے . یہ وائرس مختلف علاقوں میں جغرافیائی اور موسمی ماحول کے تناظر میں اپنے اندر تبدیلیاں لاتا ہے . بچوں کی ویکسینیشن کے حوالے سے مائیکل ڈولسٹن نے کہا کہ 2 سے 4 سال تک کے بچوں کے لئے تیار کی گئی ویکسین کے حوصلہ افزا نتائج سامنے نہیں آئے، اس لئے اس ویکیسن کی منظوری میں مزید وقت لگے گا . واضح رہے کہ کورونا کی اومیکرون قسم نے دنیا بھر کی ریاستوں کو چکرا کررکھ دیا ہے . عالمی ادارہ صحت نے کہا ہے کہ اومیکرون کے مریض دنیا بھر میں ہر تیسرے روز دگنے ہورہے ہیں . کورونا کے حالیہ پھیلاؤ کی وجہ سے ہالینڈ لاک ڈاؤن لگانے والا دنیا کا پہلا ملک بن گیا ہے، اس کے علاوہ برطانیہ میں بھی مختلف پابندیاں مزید سخت کی جارہی ہیں . . .

Ad
متعلقہ خبریں